گلیکولک ایسڈسے کریں میلازما کا علاج

0

 جلد کی بیماری میلازما میں جب چہرے کی جلد اپنا رنگ تبدیل کرنے لگتی ہے اس پر سیاہ، بھورے اور ڈارک برائون دھبے عیاں ہونا شروع ہوتے ہیں تو خواتین کے دل میں خطرے کی گھنٹی بجنا شروع ہوجاتی ہے۔ خطرے کی گھنٹی آخر کیوں نہ بجے، جب سورج کی تیز شعاعیں (uv rays) نازک اور حساس جلد پر اپنا حملہ کرتی ہیں تو پریشانی فطری عمل بن جاتی ہے، کچھ لوگ اس کو خاموشی سے سہہ لیتے ہیں اور کچھ اس پریشانی میں زمین آسمان ایک کردیتے ہیں۔

میلازما چہرے کی جلد، ناک، کان اور گردن کو بھی اپنے لپیٹ میں لے لیتا ہے، اس کا بہتر علاج تو جلد کے ماہر ڈاکٹرز کے پاس ہے ہوتا ہے لیکن میلازما کی بیماری (melasma skin diseases) کو مدنظر رکھتے ہوئے میلازما کریم، کا تو کوئی نعم البدل ہے ہی نہیں۔

لازما کریم (lazma cream)، میلازما کے باعث جلد پر پڑجانے والے سیاہ، بھورے اور گہرے برائون دھبوں کو صاف کرتی ہے، منفی اثرات سے جلد کو بچاتی ہے اور کچھ ہی دنوں میں اپنا رزلٹ دیتی ہے۔

لازما کریم کے استعمال سے میلازما (melasma) کے دھبے صاف اور جلد توانا ہوجاتی ہے۔ یہ کریم جلد کے اندر جذب ہوکر وہ جادوئی کمال دکھاتی ہے کہ کچھ ہی دنوں میں چہرہ صاف اور شفاف ہوجاتا ہے۔

اس کے علاوہ کچھ ایسڈ ایسے ہیں جو میلازما کی بیماری میں جلد کو دھبوں سے بچالیتے ہیں اور میلازما کا خاتمہ ایسے کرتے ہیں جیسے جلد پر کبھی تیز دھوپ نے میلازما کے اثرات مرتب ہی نہیں کیے تھے۔ انھی کارآمد اور پراثر ایسڈز میں ایک گلیکولک ایسڈبھی ہے، جو جلد کی حفاظت میں اپنا ثانی نہیں رکھتا، یہی وجہ ہے کہ اس کو جلد کی ادویات اور میک اپ پروڈکٹ میں بطور خاص استعمال کیا جاتا ہے۔

گلیکولک ایسڈ : (glycolic acid)

گلیکولک ایسڈنئی کولیجن کی ترقی کو فروغ دینے کے لیے استعمال کیا جاتاہے۔
یہ جلد کے مردہ خلیات کو ختم کرتا ہے اور جلد کو تروتازہ بناتا ہے۔
گلیکولک ایسڈچکنی جلد سے تیل کی مقدار کو کم کرنے میں مددگار ثابت ہوتا ہے۔
جلد اگر رنگ تبدیل کرلے تو جو اکثر سور ج کی تیز شعاعوں کی وجہ سے ہوتا ہے گلیکولک ایسڈجلد کو پہلے جیسے رنگ میں لانے کے لیے مددگار ثابت ہوتا ہے۔
گلیکولک ایسڈکا استعمال کاسمیٹکس مصنوعات میں بھی کیا جاتا ہے۔

گلیکولک ایسڈ سے میلازما کا خاتمہ :
(treat your melasma with glycolic acid )

٭ اگر میلازما کا خاتمہ گلیکولک ایسڈسے مقصود ہے تو میک اپ کے لیے خریدی جانے والی ان پروڈکٹ کا انتخاب کریں جن میں گلیکولک ایسڈشامل ہو۔
٭ گلیکولک ایسڈ کا استعمال کرتے ہوئے روزانہ سن اسکرین کا استعمال بھی کریں۔
٭ گلیکولک ایسڈسورج کی روشنی میں جلد کی حساسیت کو بڑھتا ہے۔اس سے جلد پر جہاں دھبے نمایاں ہونا شروع ہوجائیں ان کو دیکھنے میں بھی مدد حاصل ہوتی ہے۔
٭ گلیکولک ایسڈ کے استعمال سے جلد پر خارش بھی محسوس ہوسکتی ہے لیکن زیادہ کھجانے سے گریز کریں۔
٭ میلازما کے نشانات پر گلیکولک ایسڈکو کبھی بھی خالص لگانے سے بچیں اس سے جلد کو کوئی نقصان کا خطرہ بھی ہوسکتا ہے۔
٭ گلیکولک ایسڈ اور وٹامن سی دونوں کی خصوصیات ہیں جو جلد کی دیکھ بھال میں شراکت کرتے ہیں۔
٭ گلیکولک ایسڈ کے استعمال سے جلد میں چمک بھی پیدا ہوتی ہے۔