کچھ دانے چہرے پر ضدی نشان کیوں چھوڑ جاتے ہیں

0

چہرے پر نمایاں ہونے والے دانے اتنے زیادہ پریشان کن نہیں ہوتے جتنے ان کے باقی رہ جانے والے ضدی نشان ہوتے ہیں۔ یہ نشان خوبصورت سے خوبصورت چہرے کو بھی بدنما بنا دیتے ہیں، خواتین زیادہ حساس طبیعت ہونے کے باعث اس صورت حال میں اکثر احساس کمتری کا شکار ہوجاتی ہیں۔

چہرے پر نکلنے والے دانے اور ان کے سیاہ نشانات کی آخر کیا وجوہات ہوتی ہیں اور اس سے کس طرح نجات ممکن ہے اس سے آگاہی بہت ضروری ہے تاکہ جلد کی حفاظت بھرپور انداز میں کی جا سکے۔

چہرے پر دانوں کی وجوہات : (reason of pimples)

٭ جلد کا چکنا ہونا اور اس پر چکنا میک اپ دانوں کا سبب بنتا ہے۔

٭ حسن کو نکھارنے والی سستی اور غیر معیاری کریمز اور لوشنز کا استعمال۔

٭ چہرے پرباریک دانے اکثرمعدے کی تیزابیت کی وجہ سے نکلتے ہیں۔

٭ تیز مرچ مسالے اور مرغن غذائیں چہرے پر دانوں کا سبب بنتی ہیں۔

٭ غیر معیاری صابن اور فیس واش چہرے پر منفی اثرات مرتب کرتے ہیں جو دانوں کی صورت میں ظاہر ہوتے ہیں۔

٭ چکنی چیزوں کا استعمال مثلاً دہی اور دودھ کی بالائی وغیرہ چہرے کے دانوں کو بڑھاتا ہے۔

دانوں کے نشانات کی وجوہات : (cause of pimples marks)

٭ چہرے پر نکلنے والے دانوں میں مواد کا بھر جانا اور پھر اس میں خارش محسوس ہونے کی صورت میں ناخن کی مدد سے اسے کھجانے سے اس کے نشانات باقی رہ جاتے ہیں۔

٭ چہرے کے دانوں پر ڈاکٹر کے مشورے کے بغیر ادویات اور میک اپ پروڈکٹ کا استعمال دانوں کے نشان باقی چھوڑ دیتاہے۔

٭ مواد والے دانوں پر ہاتھ یا کسی اور چیز سے اس کو پھوڑنا چہرے پر گہرے نشان چھوڑ جاتا ہے۔

٭ دانے نکلنے کی صورت میں چہرے کو کھارے پانی سے دھونا نہ صرف دانوں میں خارش کا سبب بنتا ہے بلکہ دانے ختم ہوجانے کے بعد اس کے نشانات بھی چہرے پر چھوڑ جاتا ہے۔

دانوں کے نشانات کا علاج : (cure of pimples marks)

٭ دانوں اور دانوں کے نشانات کے خاتمے کے لیے ملتانی مٹی حیرت انگیز اثر رکھتی ہے۔ ملتانی مٹی میں عرق گلاب شامل کر کے لگانے سے دانے اور دانوں کے ضدی نشان ہوا ہوجاتے ۔

٭ قدرت نے کیلے کے چھلکے میں ایسا پروٹین رکھا ہے جو چہرے کی جلد پر نمودار ہونے والے دانوں کے سیاہ نشان کا خاتمہ کرنے کی صلاحیت رکھتا ہے۔ سیاہ دھبوں پرکیلے کا چھلکا ہلکے ہلکے رگڑنے سےنشان صاف اور جلد شاداب ہوجاتی ہے۔

٭ بیسن زمانہ قدیم سے حسن کو نکھارنے میں استعمال کیا جا رہا ہے، بیسن میں آدھا چمچ ہلدی اوردودھ یا پانی ملا کر گاڑھا پیسٹ بنالیں اور چہرے پر لگائیں دانے اور دانوں کے ضدی سے ضدی نشان غائب ہوجائیں گے۔

٭ کھیرے میں وافر مقدار میں پایا جانے والاپانی چہرے کو بدنما بنانے والے دانوں کے سیاہ نشان کو ختم کرنے کی صلاحیت رکھتا ہے، ہفتے میں کم سے کم دو مرتبہ کھیرے کا رس چہرے پر لگائیں اور دانوں کے سیاہ نشانات سے نجات پائیں۔

٭ برف کہنے کو تو پیاس بجھاتا ہے لیکن اس کا ایک کمال یہ بھی ہے کہ برف کا چھوٹا ساٹکڑا چہرے پر نمودار ہونے والے دانوں کے سیاہ اور ضدی نشان کو ایسے ختم کردیتا ہے جیسے کہ وہ ظاہر ہی نہیں ہوتے تھے۔ سیاہ نشان پر برف کا ٹکڑا کچھ دیر کے لیے رکھ کر چھوڑ دیں، جیسے جیسے برف پگھلتی جائے گی دانے اور داغ بھی ختم ہوتے جائیں گے ، چہرہ کھل اٹھے گا اور سب کی توجہ کا مرکز بن جائے گا۔