جواں جلد کا خفیہ راز

0

بوڑھا ہونے کا خیال ہی خواتین کو اندر سے مار دیتا ہے۔ خواتین چوں کہ اپنی عمر اور اپنے حسن کے معاملے میں بہت حساس ہوتی ہیں اور پھر عمر کے بڑھنے کے ساتھ ساتھ انھیں یہ خوف بھی کھائے جاتا ہے کہ اب عمر کی بڑھتی ہوئی رفتار کو کوئی نہیں روک سکتا۔ عمر بڑھتی ہے تو حسن بھی ماند پڑنے لگتا ہے۔ وہ چہرے جو کبھی محفل کی جان ہوا کرتے تھے انھیں نظر انداز کیا جانے لگتا ہے۔

ایسی خواتین جو جوانی سے اپنے حسن کی حفاظت پر مامور ہوتی ہیں وہ عام خواتین کی نسبت بڑھاپے میں ذرا دیر سے قدم رکھتی ہیں۔ یا اگر یہ کہا جائے کہ بڑھاپا ان کی طرف بڑھتا ہے تو وہ اپنی خوراک، احتیاطی تدابیر ، جلد کی حفاظت اور گھریلو نسخوں کے باعث بڑھاپے کو اپنے طرف آسانی سے آنے نہیں دیتیں۔

جلد کا خیال صحت کی طرح رکھا جائے تو بڑھتی ہوئی عمر کا راز خفیہ بھی رکھا جاسکتا ہے۔ چہرے کی جھریاں سب سے پہلے بوڑھا ہونے کا اعلان کرتی ہیں۔ جلد جتنی تنی ہوئی اور ہوگی جھریوں کا چہرے پر ظاہر ہونے میں اتنی ہی مشکلا ت کا سامنا ہوگا۔ جھریوں کو اپنے قابو میں کرنے کے بہت سے طریقے ہیں اگر ان پر عمل کرلیا جائے تو یہ راز بہت دیر میں فاش ہوگا کہ آپ نے بڑھانے کی دہلیز پر قدم رکھ دیا ہے۔

معیاری غذا تو صحت کے لیے ہوتی ہی اچھی ہے ، اس کے ساتھ ساتھ کچھ ایسی چیزیں بھی ہیں جو جلد کے بیرونی استعمال کے لیے کسی جادو سے کم نہیں۔میک اپ بھی اس وقت ہی اچھا لگتا ہے جب جلد اچھی ہوتی ہے۔چہرے کھلا ہوا شاداب نظر آتا ہے بالکل اسی طرح جیسے رات ہونے پر ستارے آسمان پر قافلے کی طرح چلتے ہوئے دکھائی دیتے ہیں تو اور زیادہ حسین لگتے ہیں۔

اگر آپ جواں جلد کا خفیہ راز جاننا چاہتی ہیں تو نیچے دی گئی ان باتوں پر ضرور عمل کریں جو آپ کی صحت اور جلد کے لیے مفید بھی ہیں اور آپ کو وقت سے پہلے بوڑھا ہونے کے خوف سے بھی کسی حد تک دور رکھتی ہیں۔

جلد کو جواں رکھنے کے خفیہ راز :  (secret to a younger looking skin)

٭ ہمیشہ رات کو سونے سے پہلے چہرے کو اچھی طرح صاف کریں اور کسی معیاری لوشن یا صابن سے چہرے کو دھوئیں۔

٭ اگر کسی پارٹی یا تقریب سے واپس آئی ہیں تو سب سے پہلے میک کو صاف کریں پھر نیند کی وادیوں کے سفر پر جائیں۔ میک اپ صاف کیے بغیر سونے والی خواتین جلد پر دانوں، کیل مہاسوں اور جھریوں کا شکار ہوجاتی ہیں۔

٭ میک اپ ہمیشہ آہستہ آہستہ صاف کریں جلد کو رگڑنے سے گریز کریں۔

٭ صبح جاگنے کے بعد جتنا زیادہ ممکن ہو سادہ پانی پئیں، اس سے گردے بھی صاف ہوتے ہیں اور جلد بھی چمک دار رہتی ہے۔

٭ منہ دھونے کے بعد کسی سخت کپڑے یا کھردرے تولیے سے جلد کو رگڑ کر ہر گز صاف مت کیجیے ، اس سے جلد پر باریک باریک لکیریں پڑ جاتی ہیں جو عام آنکھ سے دیکھی تو نہیں جاسکتیں لیکن جیسے جیسے عمر بڑھتی ہے یہ لکیریں نمایاں ہونا شروع ہوجاتی ہیں اور جھریوں کی شکل میں عمر کا پتا دیتی ہیں۔

٭ کھانوں میں سبزیوں اور پھلوں کا استعمال زیادہ رکھیں۔

٭ صبح نہار منہ تازہ پھلوں کا جوس پئیں،اور ناشتے میں زیادہ مرغن غذا کھانے سے بچیں۔

٭ کچی سبزیاں مثلاً کھیرا، گاجر، چقندر،پیاز، ٹماٹر اور ککڑی کا استعمال سلاد کی صورت میں کریں۔

٭ کوشش کریں جتنا بھی وقت ملے اس میں زیادہ سے زیادہ سوئیں، جتنی زیادہ نیند لی جاتی ہے جلد میں اتنا ہی تنائو اور دلکشی پیدا ہوتی ہے۔

٭ آلودہ ہوا جلد میں موجود کولیجن پروٹین کی توڑ پھوڑ کر کے ڈی این اے کو نقصان پہنچاتی ہے۔اسی لیے دن کے اختتام پر بھی گرم اور معیاری کلینزر سے لازمی کلینزنگ کریں۔

٭ ٹونر جلد کو لٹکنے سے بچاتا اور کھلے مساموں کو بند کرتا ہے۔ اپنی جلد کو مد نظر رکھتے ہوئے ٹونر کا استعمال کریں۔

٭ موئسچرائزر کا استعمال جلد کی اقسام کے پیش نظر رکھ کر کریں ۔چکنی جلد والی خواتین واٹر بیسڈ موئسچرائز ر کا استعمال کریں۔

٭ جدید تحقیق سے یہ بات سامنے آئی ہے کہ تکیے کا کھردرا غلاف عمر میں اضافے کا سبب بنتا ہے کیونکہ اس کی رگڑ سے چہرے کی جلد متاثر ہوتی ہے اور جھریاں وچھائیاں پڑنے لگتی ہیں۔ریشمی کپڑے کا غلاف استعمال کیا جانا چاہیے،اس سے نیند بھی اچھی آتی ہے اورجلد بھی تازہ رہتی ہے۔

٭ نہانے سے قبل تیز گرم پانی کا استعمال جلد کو مردہ کردیتا ہے، جب کہ نیم گرم پانی سے جلد مزید خوبصورت ہوجاتی ہے۔جلد کی حفاظتی تہہ جو جلد کی نمی برقرار رکھنے میں مدد دیتی ہے تیز گرم پانی سےیہ حفاظتی تہہ تباہ ہوجاتی ہے ۔

٭ جدید تحقیق میں یہ بات بھی سامنے آئی ہے کہ وہ خواتین جو اسمارٹ فونز کا استعمال کثرت سے کرتی ہیں ان کے چہرے کی جلد سرخ اور کھردری ہوجاتی ہےاس کے ساتھ ساتھ جلد پر خارش اور سوجن بھی دکھائی دینے لگتی ہے جو جلد کے لیے شدید نقصان دہ ثابت ہوتی ہے اور خواتین کو وقت سے پہلے بوڑھا ہونے کا پیغام بھی دے جاتی ہیں۔

٭ جلد کو جوان رکھنے کے لیے جلد کے بیرونی استعمال کی ادویات، کریمز اور لوشن کے مقابلے میں اگر غذائوں پر انحصار کیا جائے تو زیادہ اچھا ہے،پھلوں ، سبزیوں اور دالوں میں ایسے پروٹین موجود ہوتے ہیں جو جلد کو جواں رکھنے میں اہم کردار ادا کرتے ہیں۔