شادی سے پہلے چینی اور نمک کا استعمال کم کردیں

0

جسم کو ہر چیز کی ضرورت ایک مناسب مقدار میں ہوتی ہے، اگر مقدار میں کمی بیشی ہوتی ہے تو صحت اور جلد (health and skin) پر اس کے اثرات مرتب ہونا شروع ہوجاتے ہیں۔ انسانی جلد بہت نازک اور حساس ہوتی ہے، یہی وجہ ہے کہ موسم کا سب سے پہلا اثر بھی اسی پر ہوتاہے ، گرمیوں میں جلد جھلسنے لگتی ہے تو سردیوں میں خشک ہوائوں کا شکار ہو کر روکھی اور بے رونق ہوجاتی ہے۔

وٹامنز (vitamins)، پروٹین اور دیگر ضروری اجزا کی طرح جسم کو نمک اور چینی کی بھی ضرورت ہوتی ہے لیکن اگر اس کی مقدار کا خیال نہ رکھاجائے جلد کے متاثر ہونے کا بہت زیادہ امکان ہوتا ہے۔ اگر آپ کی شادی یا آپ کے گھر میں شادی کی تقریب ہے تو اچھی بیوٹیشن کے انتخاب سے پہلے اپنی جلد پر تھوڑی سے توجہ دیں، اور اگر نمک اور چینی کا استعمال زیادہ کیا جا رہا ہے تو فوری طور پر اس میں کمی لائیں کیوں کہ اس سے جلد اپنی تازگی کھو دیتی ہے اور دلہن کے روپ میں آپ کا سجنا سنورنا ضائع بھی جا سکتا ہے۔

یہ کہنا کہ چینی انسانی صحت کے لیے زہر ہے یہ غلط ہوگا، جسم کو چینی کی بھی ضرورت ہوتی ہے لیکن ایک خاص مقدار میں، اگر اس سے زیادہ چینی کا استعمال کیا گیا تو صحت اور جلد دونوں کے متاثر ہونے کا خطرہ ہوتا ہے۔ جس طرح چکنائی کا حد سے زیادہ استعمال انسانی صحت اور جلد کو نقصان پہنچاتا ہے اسی طرح کبھی کبھی چینی کا وافر مقدار میں استعمال پریشانی کا باعث بن سکتا ہے۔

طبی ماہرین کا کہنا ہے کہ چینی ک مناسب مقدار دماغی کارکردگی میں اضافہ کرتی ہے ، انسانی صحت اور جلد کو بہتر رکھنے کے لیے ہفتے میں ایک سے دو مرتبہ چینی کو غذا کا حصہ ضرور بنانا چاہیے۔ عالمی اداہ صحت کی ایک رپورٹ کے مطابق انسانی صحت کے لیے روزانہ 25 گرام شکر کا استعمال ضروری ہے، اگر اس سے زیادہ کا استعمال کیا جانے لگے تو یہ بات ذہن میں بیٹھا لیں کہ پھر یہ چینی زہر کی صورت اختیار کرسکتی ہے۔

چینی کا زیادہ استعمال جلد کے لیے نقصان دہ :
(excessive use of  sugar)

زیادہ مقدار میں نمک یا چینی کے استعمال سے جسم میں كیلوريز بڑھتی ہیں اور کینسر کا خطرہ بھی بڑھتا ہے۔
چینی خون کے اندر شامل ہو کر کبھی کبھی خطرناک مالیکول کا سبب بنتی ہے۔
جس کی وجہ سے جلد خشک اور کھردری ہوجاتی ہے۔
جلد کا تنائو ختم ہونے لگتا ہے اور جلد ڈھیلی پڑ جاتی ہے۔
وقت سے پہلے چہرے پر ظاہر ہونے والی جھریوں کا سبب بھی اکثر چینی کا زیادہ استعمال ہوتا ہے۔

نمک کا زیادہ استعمال جلد کے لیے نقصان دہ : (excessive use of salt)

نمک زبان کے ذائقے کے لیے تو بہت اہم ہے، لیکن غذائوں میں اس کا استعمال کبھی کبھی صحت اور جلد کے حوالے سے کسی انوکھی آزمائش سے بھی دو چار کرسکتا ہے۔

جلد کے ماہرین کا کہنا ہے کہ اگر ضرورت سے زیادہ نمکین غذائوں کا استعمال کیا جائے تو جلد کے خشک ہونے کا امکانات بڑھ جاتے ہیں اور جلد بے رونق اور بے جان نظر آنے لگتی ہے۔

نمک کا وافر مقدار میں یا مسلسل استعمال جسم کے خلیوں سے بھاری مقدار میں مادہ خارج کرتا ہے، جس سے جلد خراب ہونے کے علاوہ جھریوں کا شکار بھی ہوجاتی ہے۔

نمک کے زیادہ استعمال سے جلد سکڑنے لگتی ہے ، جس سے جلد پر کبھی کبھی سفید دھبے بھی نمایاں ہونے لگتے ہیں۔