اومیگا تھری کو اپنی خوراک میں شامل کریں

0

اومیگا تھری پروٹین، جسے اومیگا تھری فیٹی ایسڈ (omega 3 fatty acids) بھی کہا جاتا ہے، انسانی جسم کے لیے بہت اہم اور ضروری ہوتا ہے۔ بے شماربیماریوں سے لڑنے کی صلاحیت رکھتا ہے اور صحت کو برقرار رکھنے میں اہم کردار ادا کرتا ہے۔

ایسے افراد جو ہر عمر میں تندرست، توانا ،جوان اور اپنی جلد کو تروتازہ رکھنا چاہتے ہیں انھیں چاہیے کہ اپنی خوراک میں اومیگا تھری فیٹی ایسڈ کا استعمال ضرور کریں۔

جس طرح وٹامنز (vitamins) ، کیلشیم اور دیگر اجزا انسانی جسم اور صحت کے لیے لازم ہیں اسی طرح اومیگا تھری فیٹی ایسڈ بھی کسی سے کم نہیں۔یہ وہ چکنائی ہے جو جسم کے لیے کسی صورت میں بھی نقصان دہ نہیں ہوتی۔

خواتین میں ہارمونز کے تواز ن کو برقرار رکھنے کے لیے اومیگا تھری فیٹی ایسڈ جادوئی اثر رکھتا ہے، حمل کے دوران اور بچے کی پیدائش کے بعد اگر اس کا باقاعدہ استعمال کیا جائے تو صحت جلد بحال ہوتی ہے۔

بین الاقوامی سطح پر سامنے والی حالیہ سروے رپورٹ کے مطابق اومیگا تھری نہ صرف صحت کا انقلابی خزانہ ہے بلکہ یہ زندگی بھی بڑھاتا ہے اور قبل از وقت موت کو روکتا ہے۔

اومیگا تھری حاصل کرنے کے ذرائع : (source of omega 3)

پھلیوں، بیچوں، سبزیوں کے تیل، اخروٹ ، السی کے بیج ، سبز پتوں والی سبزیاں ،مرغی، خشک میوہ جات،بادام، پودینہ، پالک، مچھلی کے تیل اور بروکولی اومیگا تھری حاصل کرنے کے بہترین ذرائع ہیں ۔

اومیگا تھری کے صحت کے لیے فوائد : (omega 3 beneficial for health)

٭ اومیگا تھری کا استعمال بڑھایا جائے تو آلودگی کے منفی اثرات سے بچاجاسکتا ہے۔

٭ اومیگا تھری سے جسمانی تھکاوٹ دور ہوتی ہے۔

٭ اومیگا تھری کینسر سے لڑنے کی صلاحیت رکھتا ہے۔

٭ دل کے امراض میں اس کا استعمال بہت مفید ہے۔

٭ یہ جسم میں خون کو جمنے سے روکتا ہے۔

٭ اومیگا تھری کا استعمال فالج کے مرض میں شفا کا بہترین ذریعہ ہے۔

٭ اومیگا تھری کے استعمال سے جسم میں جوڑوں کے درد کا خطرہ بہت حد تک ٹل جاتاہے۔

٭ ماہرین کی جدید تحقیق کے مطابق اومیگا تھری یادداشت کو بڑھانے میں مدد دیتا ہے۔

٭ اس کے استعمال سے بے شمار دماغی بیماریوں کا خاتمہ ہوتا ہے۔

٭ اومیگا تھری ڈپریشن سے بچانے میں مدد گار ثابت ہوتاہ ے۔

٭ اومیگا تھری کا استعمال تولیدی نظام میں کو بہتر بناتا ہے ۔

٭ اومیگا تھری فیٹی ایسڈ کی بڑی مقدار مرد اور عورت کے تولیدی نظام میں دورانِ خون کو تیز کرتی ہے۔